یمن میں میلن مارچ ریلی اور جشن میلادالنبی(ص)

Rate this item
(0 votes)
یمن میں میلن مارچ ریلی اور جشن میلادالنبی(ص)

المسیرہ نیوز کے مطابق انصاراللہ اور حوثی رہنما سیدعبدالملک بدرالدین الحوثی نے پیغام میں گذشتہ روز کہا تھا کہ امید ہے اس سال بھی لاکھوں یمنی جشن میلاد النبی کی ریلی میں شرکت کریں گے اور عشق نبی آخر الزمان میں اپنی عقیدت کا ثبوت دیں گے۔

 

رپورٹ کے مطابق صنعا میں جشن میلاد میدان «السبعین» میں منایا گیا اور ریلی نکالی گئی۔

 

پیر کے روز صبح ہی سے لاکھوں افراد میدان میں جمع ہوئے جو مختلف شہروں سے پرچموں کے ساتھ شریک تھےاور انہوں نے مختلف بینرز اٹھائے ہوئے تھے۔

 

یمن میں میلن مارچ ریلی اور جشن میلادالنبی(ص)

جشن کمیٹیوں کے مطابق صعدہ شہر میں بھی خصوصی طور پر جشن کا اہتمام کیا گیا تھا جبکہ میدان «المیناء» جو صوبہ «الحدیده»،  «بنی مشطاء» جنوب مغربی  شهر «شفر» صوبہ «حجة»، صوبہ عمران کے اسپورٹس اسٹیڈیم، شهر الحزم صوبہ الجوف، میدان «هران» صوبہ ذمار، یونیورسٹی میدان «إب» اور شهر «یریم» میں بھی جشن میلاد کا اہتمام کیا گیا تھا۔

 

کمیته‌های سازمان‌دهنده این مراسم پرشکوه در استان‌های تعز، المحویت، ریمة، مأرب، البیضاء، الضالع نیز مکان‌های اختصاص یافته برای این گردهمایی مردمی را اعلام کرده‌اند و در خصوص آن اطلاع‌رسانی‌های لازم را انجام داده‌اند.

 

دارالحکومت کے مرکزی میدان الثورہ اسٹیڈیم میں مرکزی جشن کا اہتمام تھا جبکہ خواتین کی ریلی بھی اس موقع پر نکالی گیی۔

 

علما کرام نے میلاد نبی مکرم اسلام(ص) نے یمنی عوام سے جشن میں بھرپور شرکت کی دعوت کی تھی۔

 

 

علما کے بیان میں کہا گیا تھا کہ میلاد پیامبر اکرم(ص) وحدت امت اور فرقہ واریت سے دوری کا بہترین موقع فراہم کرتا ہے۔

 

علما نے بیان میں افغانستان میں داعش کے حملوں کی بھی شدید مذمت کی ۔

 

جشن میلاد نبی گرامی اسلام(ص) یمن میں اس حال میں بھرپور طریقے سے منایا جارہا ہے جہاں یہ غریب پسماندہ ملک چھ سالوں سے سعودی الائنس کے حملوں کا سامنا کررہا ہے اور شدید اقتصادی مشکلات سے دوچار ہے۔/

Read 52 times

Add comment


Security code
Refresh