حج ایک الہی منصوبہ از رہبر انقلاب

Rate this item
(0 votes)
حج ایک الہی منصوبہ از رہبر انقلاب

علم الہی کا احاطہ!

حج کے عنوان سے مختصرا عرض کروں گا کہ حج ایک اللہ کا ایک مدبرانہ منصوبہ ہے-اللہ کے تمام منصوبے مدبرانہ ہیں لیکن یہ منصوبہ اپنے زاویوں،خصوصیات اور دائرہ کار کی وسعت کے لحاظ سے دوسرے تمام پروگراموں/برناموں سے مختلف ہے-یہ اللہ(جل جلالہ) کے علمی احاطے کے جانب نشاندھی کرتا ہے،جو اسے انسان کے وجود پر،انسان کے دل پر،انسانی ضروریات پر حاصل ہے

 

 

 

 

فریضہ حج اور انسانی ضروریات!

اللہ کے علم کا احاطہ نہ صرف ایک انسان اور ایک نسل پر بلکہ پورے معاشرے پر محیط اور تمام نسلوں پر جاری و ساری ہے-اور یہ علمی احاطہ اس چیز کا باعث بنا کہ خداوند متعال انسانوں کو انکی ضروریات اور ان ضروریات کے مختلف زاویوں کے مطابق ایک الہی برنامہ فراہم کرے-اور انسان کو اسے استعمال کرنے کا موقع دے اور یہ عظیم برنامہ حج ہے

 

 

 

 

 

قانون الہی سے معرفت الہی!

لہذا جب سورہ مائدہ پڑھتے ہیں کہ جس میں اللہ تعالی حج کے بعض احکام بیان کرنے کے بعد فرمارہا ہے”… کہ(جملہ) اس لیے ہے کہ جان لیں کہ اللہ اس پر کہ جو کچھ آسمانوں میں ہے اور جو زمین میں ہے آگاہ ہے اور جدا ہر چیز کا علم رکھتا ہے”(مائدہ ٩٧)-یہ احکام کہ جو تمہارے لئے ہم نے واجب کی ہیں جیسے خانہ کعبہ اور غیر نشان زدہ اور نشان زدہ قربانی و غیرہ یہ اس لئے ہے کہ تم اپنے پروردگار کے علمی احاطے کے متعلق باخبر ہوجاؤ-جان لو کہ اللہ تعالی تمہاری زندگی کے رازوں کو کس طرح جانتا ہے اور انکی بنیاد پر تمہارے لئے قوانین بناتا ہے

 

Read 677 times